Category: Business Matters
Fatwa#: 38524
Asked Country: Pakistan

Answered Date: Aug 12,2017

Title: Partnership and Mutalabah

Question

اسلام علیکم. جناب کیا فرماتے هیں علماء کرام مندرجه زیل مسئله کے بارے میں. جناب میرا ایک دوست کے ساتھ شراکت داری په مبنی کاروبار تھا. هم سافٹ وئر اور ویب سائٹس بناتے تھے. میرا دوست مارکیٹ سے پروجیکٹ لیتا تھا اور میں وه کام مکمل کر کے دیتا تھا. هماری شراکت برابر برابر کی تھی. اس دوران میں پراجیکٹ مکمل کرتا گیا اور پیمینٹ میرا دوست وصول کر لیتا. کیونکه میرے دوست کی مالی حالات درست نهیں تھے اس لیے وه مجھے میرا حصه نهیں دیتا تھا . یوں اس په میرا تقریبا ایک لاکھ تینتیس هزار کا قرض چڑھ گیا. اس کی مالی حالت کی وجه سے کافی عرصه میں نے مطالبه نهیں کیا. لیکن ساتھ ساتھ میں اس سے تفصیل لیتا رهتا که کھاتوں کی کیا پوزیشن هے. اس دوران هم نے چند پروجیکٹ مکمل کئے بغیر هی واپس کر دئے اور جو ایڈوانس لیا تھا وه واپس کر دیا کسٹمر کو. کچھ عرصی بعد چند وجوه کی بنا پر میرے دوست نے شراکت داری ختم کر دی. تب میں نے اپنی رقم کا مطالبه کیا تو میرا دوست کهنے لگا که یه رقم آپ کی نهیں بنتی کیونکه اپ نے تین پراجیکٹ مکمل نهیں کئے تھے اور آپ کی وجه سے همیں یه رقم واپس کرنی پڑی. وه پراجیکٹ اگر هم مکمل کرتے تو همیں دو لاکھ بائیس هزار ملتے چونکه تم نے پراجیکٹ مکمل نهیے کئے اس لیے بجاےاس کے که میں اپ کو رقم دو اپ مجھے رقم دیں گے. حالانکه پراجیکٹس په میں نے کافی کام کیا تھا. لیکن کچھ کسٹمر کی وجه سے کچھ هماری وجه سے پراجیکٹ واپس هوے. اس طرح میرے دوست کی مارکیٹ میں محنت ضائع هوئی اور میر ا پراجیکٹ په وقت. اب اپ بتائیں کیا میرے دوست کا رقم واپس نه کرنا صحیح هے اور کیا میرا رقم کا مطالبه درست هے.?

Answer

اگر آپکا سوال حقیقت حال کے مطابق ہے تو جواب ظاہر ہے .جو پروجیکٹ مکمّل ہو چکا اور پیمنٹ مل گیا وہ عقد کے مطابق دونو ں شریکوں کا ہے .لہذا  اس حاصل شدہ پیمنٹ میں آپکا بھی حصّہ ہے،بعد کے پروجیکٹ کے مکمّل ہونے یا نہ ہونے کا اعتبارنہیں ہے.[i]



[i] و إذا إشترك ألرجلان في عمل بأيديهما فارادا............ويعمل كل واحد منهما في ذلك برايه،فما رزقهماالله تعالى في ذالك من شي فهو بينهما نصفين [كتاب الشركة،الأصل للإمام محمد مجلد ٤ صفحة ٥٠دار ابن حزم]

DISCLAIMER - AskImam.org questions
AskImam.org answers issues pertaining to Shar'ah. Thereafter, these questions and answers are placed for public view on www.askimam.org for educational purposes. However, many of these answers are unique to a particular scenario and cannot be taken as a basis to establish a ruling in another situation or another environment. Askimam.org bears no responsibility with regards to these questions being used out of their intended context.
  • The Shar's ruling herein given is based specifically on the question posed and should be read in conjunction with the question.
  • AskImam.org bears no responsibility to any party who may or may not act on this answer and is being hereby exempted from loss or damage howsoever caused.
  • This answer may not be used as evidence in any Court of Law without prior written consent of AskImam.org.
  • Any or all links provided in our emails, answers and articles are restricted to the specific material being cited. Such referencing should not be taken as an endorsement of other contents of that website.